What Am I * * * * * * * میں کیا ہوں

میرا بنیادی مقصد انسانی فرائض کے بارے میں اپنےعلم اور تجربہ کو نئی نسل تک پہنچانا ہے * * * * * * * * * * * * * * رَبِّ اشْرَحْ لِي صَدْرِي وَيَسِّرْ لِي أَمْرِي وَاحْلُلْ عُقْدَةِ مِّن لِّسَانِي يَفْقَھوا قَوْلِي

انسانيت کے عَلَمبرداروں کی منافقت

Posted by افتخار اجمل بھوپال پر دسمبر 15, 2006

 کيتھولک لوگوں نے حضرت مريم کی يہ تصوير بنائی ہے ۔ اس ميں اُنہيں پورا جسم اور بال ڈھانپے ہوئے دکھايا ہے جيسا کہ عيسائی اُنہيں ديکھنا چاہتے ہيں ۔ اگر اسی طرح کا لباس مسلم خاتون پہنے تو اسے حقير سمجھا جاتا ہے ۔

 

عيسائی بيوائيں اکثر اپنا جسم اچھی طرح ڈھانپتی ہيں ۔ يہ ان کا خاوند سے خلوص اور قابلِ تعريف فعل سمجھا جاتا ہے ۔

 جب مسلم خواتين اپنے پيدا کرنے والے سے خلوص کے اظہار ميں اپنا جسم ڈھانپتی ہيں تو اسے لائقِ مذمت کہا جاتا ہے ۔

 

 اَيمِش عيسائی خواتين جسم کے علاوہ سر کے بال بھی ڈھانپتی ہيں تو اُنہيں پارسا سمجھا جاتا ہے اور لوگ ان کے عقيدہ سے متفق نہ ہوتے ہوئے بھی ان کی عزت کرتے ہيں اور وہ کسی حقوقِ خواتين تنظيم کا نشانہ بھی نہيں بنتيں ۔

   يہودی مذہبی خواتين اپنے سر کے بال سکارف يا مصنوعی بالوں سے ڈھانپتی ہيں ۔ کسی ملک ميں ايسی کوئی تجويز نہيں کہ ايسی يہودی خواتين پر پابندی لگائی جائے اسلئے کہ اُن کا مذہب اُنہيں اس کی اجازت ديتا ہے ۔

جب مسلم خواتين اپنے دين کے مطابق اپنے سر کے بال ڈھانپتی ہيں تو انہيں کيوں معاشرے کی پِسی ہوئی کہا جاتا ہے اور اُن کے اس فعل کو بذريعہ قانون کيوں ممنوع قرار ديا جاتا ہے ؟  کيا جو کپڑا مسلم خواتين استعمال کرتی ہيں وہ اس کپڑے سے گھٹيا ہوتا ہے جو عيسائی يا يہودی خواتين استعمال کرتی ہيں ؟

بشکريہ : حجاب ہيپّوکريسی 

Advertisements

2 Responses to “انسانيت کے عَلَمبرداروں کی منافقت”

  1. فہد احمد کیہر said

    حضرت واہ واہ آپ نے تو کمال کردیا۔

    آپ کے بلاگ میں دلچسپی کی دو خاص باتیں ہیں ایک تو میری تاریخ میں دلچسپی اور دوسری علامہ اقبال کو اپنا روحانی استاد تسلیم کرنا۔
    اگر مجھ ناچیز کو اپنے بارے میں کچھ بتانا چاہیں تو برائے مہربانی میرے ای میل ایڈریس
    fkehar@gmail.com
    پر بھیج دیں، عین نوازش ہوگی

  2. فہد احند کيہر صاحب

    بہت شکريہ ۔ ميں علامہ اقبال صاحب کو ايک عظيم فلسفی مانتا ہوں ۔ ای ميل اڈريس دينے کا شکريہ ۔ انشاء اللہ جلد رابطہ کروں گا ۔ ويسے ميرے اسی بلاگ پر ميرے متعلق کافی معلومات موجود ہيں ۔ اپنی آپ بيتی ابھی تک ميں مکمل نہ کر سکا جس کی وجہ يہ بلاگ ہيں جن پر لکھنے کيلئے مجھے بہت مطالع کرنا پڑتا ہے اور آپ بيتی لکھنے کيلئے وقت نہيں ملتا ۔

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

 
%d bloggers like this: