What Am I * * * * * * * میں کیا ہوں

میرا بنیادی مقصد انسانی فرائض کے بارے میں اپنےعلم اور تجربہ کو نئی نسل تک پہنچانا ہے * * * * * * * * * * * * * * رَبِّ اشْرَحْ لِي صَدْرِي وَيَسِّرْ لِي أَمْرِي وَاحْلُلْ عُقْدَةِ مِّن لِّسَانِي يَفْقَھوا قَوْلِي

ہماری امداد کریں ناں۔۔۔

Posted by افتخار اجمل بھوپال پر اکتوبر 21, 2005

میرا نام صبا ہے۔ میں نویں جماعت میں پڑھتی ہوں۔ میری عمر اب چودہ سال ہے۔ اس زلزلے میں میرے امی ابو دونوں کا انتقال ہو گیا۔ ہم دو بہنیں ہیں۔ لاوارث ہیں۔ بس یہاں کھلے آسمان کے نیچے بیٹھے رہتے ہیں۔ یہاں کھانے پینے کے لیے بھی کچھ نہیں ہے۔ ابھی بچے رو رہے تھے، بھوکے ہیں سب۔ ہمیں کچھ مدد نہیں دے رہے۔ ایک گاوں میں رہنے والے دہات والوں کو ایک ٹینٹ دے دیتے ہیں، اور کہتےہیں کہ بس سب کو دے دی امداد۔ اس وقت میرے آس پاس بہت سارے بچے بیٹھے ہوئے ہیں۔ سارا دن یہ بچے یوں ہی بیٹھے رہتے ہیں۔ کبھی کھانا مانگتے ہیں، کبھی روتے ہیں۔ سردی بھی بہت رہتی ہے۔ کچھ بچوں کو نمونیا ہو گیا ہے۔ تین، چار، پانچ سال کے چھوٹھ چھوٹے بچے ہیں جنہیں سردی کی وجہ سے نمونیا ہو گیا ہے۔ سارے جانور اور مویشی بھی مکانوں کے نیچے دب کر مر گئے۔ہماری امداد کریں ناں۔۔۔

یہ جو جہاز وغیرہ ہیں، یہ ہمارے سامنے فوجی رہتے ہیں ان کی مدد کرتے ہیں ، ادھر جا کر بیٹھتے ہیں ۔ ہمیں کچھ نہیں دیتے ۔ پل
بھی جو تھا ، دریا نیلم کے اوپر، وہ بھی گر گیا ۔ ہماری کچھ مدد کریں ناں۔۔۔

Advertisements

4 Responses to “ہماری امداد کریں ناں۔۔۔”

  1. SHUAIB said

    بھوجن
    آپ نے مجھ سے بھوج کا مطلب پوچھا تھا
    عام ہندی اردو زبان میں “کھانا“ کو کھانا ہی کہتے ہیں اور یہ بھی صحیح ہے کہ کھانا کو ہندی میں بھوجن بھی کہا جاتا تھا مگر اب عام ہندی میں بھوجن نہیں بلکہ کھانا ہی کہتے ہیں – رہی بات بھوجن کی، میرا خیال ہے سنسکرتی زبان میں بھوجن کا مطلب پیٹ بھرنے کیلئے کہا جاتا ہوگا – آگے کیا ہے مجھے نہیں معلوم، آپ نے مجھ سے بہت ہی مشکل سوال پوچھا ہے کیونکہ مجھے اردو بھی ٹھیک سے نہیں آتی –

  2. اجمل said

    شعیب صاحب
    اگر راشٹریہ سیوک سنگ یا ہندوتوا کو معلوم ہو گیا تو اپنے ملک نہیں جا سکیں گے ۔ محظ مذاق ۔
    اچھا یہ بتائیے کہ ہندوستان میں بہت سے ایسے راجے یا نواب ہوۓ ہیں جن کو راجہ بھوج کہا جاتا تھا ۔ اس کی کیا وجہ تھی ؟

  3. Noumaan said

    اس بارے میں ایک کہاوت بھی ہے۔ "کہاں راجہ بھوج کہاں گنگو تیلی

    ویسے ہندوستان میں جو زبان لوگ اب بولتے ہیں وہ ایسی ہے کہ سنسکرت اور اردو دونوں اسے پڑھ کر شرمندہ ہوجائیں۔ ‘

  4. اجمل said

    نعمان صاحب
    ہاں کہاوت تو ہے مگر بھوج کا مطلب کیا ہے ۔ تھوڑی محنت کر کے میری مدد کیجئے ۔شائد اس کا صحیح ترجمہ میری سالہا سال کی تحقیق کو مکمل کنے میں ممد ہو

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

 
%d bloggers like this: